پنجگور گزشتہ 6 ماہ میں 60 سے 65 بے گناہ نوجوانوں کو قتل کیا گیادن دہاڑے لگثری گاڑیوں میں مْسلح افراد گھومتے ہیں پوچھنے والا کوئی نہیں‘ میررحمت صالح بلوچ صوبائی صدر این پی

کوئٹہ(ثبوت نیوز)نیشنل پارٹی کے صوبائی صدر میررحمت صالح بلوچ نے کہا ہے کہ ضلع پنجگور گزشتہ 3 سالوں سے بدامنی کی آگ میں جل رہا ہے پنجگور میں گزشتہ 6 ماہ میں 60 سے 65 بے گناہ نوجوانوں کو قتل کیا گیادن دہاڑے لگثری گاڑیوں میں مْسلح افراد گھومتے ہیں پوچھنے والا کوئی نہیں

پنجگور میں تعینات پورا انتظامی ڈھانچہ کرپشن، لوٹ زمینوں پر قبضے میں ملوث ہے وزیراعلیٰ، چیف سیکرٹری سمیت دیگر اعلی حکام آنکھیں بند کر کے بیٹھے ہیں

چیف جسٹس بلوچستان ہائی کورٹ سے گزارش ہے کہ صورتحال کا نوٹس لیں قتل و غارت گری، ڈکیتیوں لوٹ مار کا سلسلہ یونہی جاری رہا تو سخت احتجاج پر مجبور ہوجائیں گے‘یہ بات انہوں نے کوئٹہ پریس کلب میں پریس کانفرنس کرتے ہوئے کہی

اس موقع پر محراب بلوچ‘ محمد علی لانگو‘ نیاز بلوچ اور دیگر بھی موجود تھے‘ انہوں نے کہاکہ اب تک پنجگور میں 65سے نوجوان جن میں اصغر علی فٹ بالر‘ داد جان‘ قدیر‘حاجی محمد موسیٰ‘ محمد عادل عزیز‘ صغیر بادینی‘ محمد نواز سمیت دیگر کو قتل کیاگیا ہے

انتظامیہ خاموش تماشائی بنے بیٹھے ہیں بعض اوقات یہی لوگوں کے گھروں میں گھس کر چادر اور چاردیواری کی بھی پامالی کررہی ہے قاتل و مقتول کو معلوم نہیں کہ ہم کیوں مررہے ہیں اور ہم اس کو کیوں مروارہے ہیں

ادارے بیگ چکے ہیں اور ریاست کا رٹ ختم ہوچکا ہے انہوں نے کہاکہ جو لوگ شہید کیے گئے ان کو کوئی گناہ نہیں ہے اور نہ ہی کسی کے آلہ کار بنے ہوئے ہیں انہوں نے کہاکہ اس طرح ایک چھوٹی بچی کو گھر والوں نے 20ہزار کی چوری میں گرفتار کرکے پتھروں سے شہید کیاگیا

پھر بھی انتظامیہ کو کوئی ہوش نہیں آئی وزیراعلیٰ سے لیکر چیف سیکرٹری تک تمام لوٹ مار عیاشی اور اسکیمات کو تقسیم کرنے میں لگے ہوئے ہیں پنجگور سے منتخب ہونے والے وزیر سپاہی سے لیکرایس ایچ او اور ایس پی تک اپنا کمیشن لے رہی ہے

اور انتظامیہ کو مکمل چھوٹ دی ہے چیف جسٹس بلوچستان اس حوالے سے ایکشن لیکر پنجگور کے تمام انتظامیہ کو ٹرانسفر کیا جائے اور شہید ہونیوالے خاندانوں کو انصاف فراہم کیا جائے نہ ہونے کی صورت میں جس طرح بدھ کے روز پنجگور میں کامیاب شٹرڈاؤن ہڑتال کی اور آج بھی جمعرات احتجاجی مظاہرہ اور پولیس تھانے کا گھیراؤ کرینگے

پھر بھی حالات نہیں سنبھالا تو نیشنل پارٹی دیگر جماعتوں سے ملکر سخت احتجاج کرے گی انہوں نے کہاکہ اس حوالے سے انسانی حقوق کی تنظیمیں بھی ایکشن لیں کیونکہ یہ ایک انسانی معاملہ ہے آئے روز بے گناہ لوگ شہید ہورہے ہیں

ساتھ میں عوام کی املاک کو بھی نقصان پہنچارہے ہیں ایک دن میدانی علاقے میں ٹرکوں کو لیکر اس سے چار کروڑوں روپے کا سامان بے دریغ سے لوٹ لیا۔