تنازعات کا حل جنگ نہیں، ٹی ٹی پی کو دوبارہ مذاکرات شروع کرنے کی دعوت دیتا ہوں پاکستان میں امن کے قیام،اچھے ماحول کیلئے کابل میں 2 مرتبہ مذاکرات ہوئے

پشاور(ثبوت نیوز)تحریک طالبان پاکستان نے سیز فائر کے خاتمہ کا اعلان کیا جس پر افسوس ہے،تنازعات کا حل جنگ نہیں، ٹی ٹی پی کو دوبارہ مذاکرات شروع کرنے کی دعوت دیتا ہوں ٹی ٹی پی کو کہتا ہوں بندوق رکھ دیں اور بامعانی مذاکرات کے لئے آگے بڑھیں

ان خیالات کا اظہار ترجمان خیبر پختونخوا حکومت بیرسٹر محمد علی سیف نے نشتر ہال پشاور میں پروگرام کے بعد صحافیوں سے بات چیت کرتے ہوئے کیا انہوں نے کہا کہ جنرل فیض نے تحریک طالبان کے ساتھ مذاکرات کا آغاز کیا تھا

انہوں نے کہا کہ پاکستان میں امن کے قیام،اچھے ماحول کیلئے کابل میں 2 مرتبہ مذاکرات ہوئے،ایمن الظواہری پر ڈرون حملہ اور دیگر ناخوشگوار واقعات سے مذاکرات کا عمل معطل ہوا

انہوں نے کہا کہ طالبان کی جانب سے جنگ بندی کے اعلان سے قبل بھی حملے ہوئے تھے تب بھی مذاکرات کے دروازے بند نہیں ہوئے۔ انہوں نے کہا کہ تنازعات کا حل جنگ نہیں، ٹی ٹی پی کو دوبارہ مذاکرات شروع کرنے کی دعوت دیتا ہوں

ٹی ٹی پی کو کہتا ہوں بندوق رکھ دیں اور بامعانی مذاکرات کے لئے آگے بڑھیں انہوں نے کہا کہ ضم شدہ قبائلی، سوات اور دیگر علاقوں میں کچھ ایسی کاروائیاں ہوئی جس سے مذاکرات متاثر ہوئے۔ اس کے باوجود اب بھی مذاکرات کے دورازے کھلے ہیں

انہوں نے کہا کہ اسمبلیاں تحلیل کرنے کا اعلان عمران خان نے کیا، تحریک انصاف کے ممبران صوبائی اسمبلی پارٹی فیصلے پر عمل درآمد کرنے کیلئے تیار ہے،انہوں ننے کہا کہ شاہ محمود قریشی کی سربراہی میں اسمبلیوں کی تحلیل کیلئے کمیٹی بنائی گئی ہے

بیرسٹر محمد علی نے کہا کہ ہم چاہتے ہیں پورے ملک میں ایک موقع پر انتخابات کئے جائیں اور فوری کئے جائیں،انہوں نے کہا کہ سردار حسین بابک کو دھمکی کا ڈرامہ رچایا جارہا ہے،ایک پٹاخے کے پھوٹنے کے بعد یہ ملک میں نظر نہیں آئینگے .