عدم اعتماد‘ بی این پی نے مذاکراتی کمیٹی تشکیل دیدی‘اختر حسین لانگو جمعیت نے تحریک عدم اعتماد کے حوالے سے اب تک کوئی فیصلہ نہیں کیا‘ ملک سکندر ایڈووکیٹ

کوئٹہ(ثبوت نیوز) جمعیت علماء اسلام کے پارلیمانی و اپوزیشن لیڈرملک سکندر خان ایڈووکیٹ نے کہا ہے کہ جمعیت علماء اسلام نے تحریک عدم اعتماد کے حوالے سے اب تک کوئی فیصلہ نہیں کیا ہے وقت آنے پر جمعیت علماء اسلام فیصلہ کرے گی

جمعیت علماء اسلام کا مشاورت جاری ہے صوبائی امیر اور پارٹی کو اعتماد میں لیکر جمعیت کے پارلیمانی گروپ فیصلہ کرے گی‘ان خیالات کا اظہار انہوں نے اسمبلی اجلاس سے قبل میڈیا سے بات چیت کرتے ہوئے کیا

ملک سکندر ایڈووکیٹ نے کہاکہ جمعیت علما اسلام نے تحریک عدم اعتماد کے حوالیسے ابھی تک کوئی فیصلہ نہیں کیاتحریک عدم اعتماد پر ووٹنگ کے لئے ابھی تک 3 سے 7 دن رہتے ہیں تحریک عدم اعتمادکامیاب ہوتی ہے یا نہیں

کس حوالے سے کچھ نہیں کہہ سکتاتحریک عدم اعتماد کامیاب ہوگئی یہ بات وہی بتا سکتے ہیں جنہوں نے یہ جمع کروائی انہوں نے کہاکہ جمعیت علماء اسلام نے تحریک عدم اعتماد کے حوالے سے اب تک کوئی فیصلہ نہیں کیا ہے وقت آنے پر جمعیت علماء اسلام فیصلہ کرے گی

جمعیت علماء اسلام کا مشاورت جاری ہے صوبائی امیر اور پارٹی کو اعتماد میں لیکر جمعیت کے پارلیمانی گروپ فیصلہ کرے گی

جبکہ دوسری جانب بلوچستان نیشنل پارٹی کے مرکزی رہنماء و پبلک اکاؤنٹس کمیٹی کے چیئرمین اختر حسین لانگو نے کہا ہے کہ تحریک انصاف عدم اعتماد کے حوالے سے بلوچستان نیشنل پارٹی نے مذاکراتی کمیٹی تشکیل دیدی تحریک عدم اعتماد پیش کرنے والوں نے بی این پی سے کوئی رابطہ نہیں کیا

تاہم باپ پارٹی کی جانب سے دو دن قبل غیر رسمی رابطہ کیاگیا جس پر پارٹی قیادت کو اعتماد میں لے کر ہی فیصلہ کرینگے‘ان خیالات کا اظہار انہوں نے میڈیا سے بات چیت کرتے ہوئے کیا‘ اختر حسین لانگو نے کہاکہ بی این پی نے مذکراتی کمیٹی تشکیل دی ہے

تحریک عدم اعتماد پیش کرنے والوں نے پہلے ہم سزے کوئی رابطہ نہیں کیا تھا دو روز قبل ظہور بلیدی نے غیر رسمی ملاقات کی تھی بی این پی نے ابھی تک کسی کی حمایت یا مخالفت کا کوئی فیصلہ نہیں کیابی این پی سیاسی جماعت ہے

فیصلے مشاورت سے کئے جاتے ہیں بی این پی آج کے اجلاس میں غیر جانبدار رہے گی بی این پی کی مذاکراتی کمیٹی کہ رائے آنے کے بعد اپنے مستقبل کا فیصلہ کرینگے۔