مولانا عبدالواسع سے جام کمال کی قیادت میں بی اے پی کے وفد کی ملاقات ہماری پشتون بلوچ روایات ہے بلوچستان میں تحریک عدم اعتماد کے حوالے سے اہم پیش رفت

کوئٹہ(ثبوت نیوز)جمعیت علماء اسلام بلوچستان کے صوبائی امیر اور وفاقی وزیر ہاؤسنگ اینڈ ورکس مولانا عبدالواسع سے بلوچستان عوامی پارٹی کے مرکزی صدر و سابق وزیراعلیٰ بلوچستان جام کمال خان کی قیادت میں وفد نے ان کی رہائش گاہ پر ملاقات کی

ملاقات میں بلوچستان کی موجودہ سیاسی صورتحال اور دیگر امور پر تبادلہ خیال کیاگیا گزشتہ روز بلوچستان عوامی پارٹی کے مرکزی صدر جام کمال خان کی قیادت میں باپ پارٹی کے وفد نے جمعیت علماء اسلام کے صوبائی امیر مولانا عبدالواسع سے ان کی رہائش گاہ پر ملاقات کی

ملاقات میں باپ پارٹی کے ظہور احمد بلیدی‘ عارف جان محمد حسنی‘ سلیم کھوسہ‘ حاجی مٹھا خان کاکڑ شامل تھے ملاقات میں وزیراعلیٰ بلوچستان میر عبدالقدوس بزنجو کے خلاف تحریک عدم اعتماد سے پید اہونے والی صورتحال صوبے کے سیاسی صورتحال اور شیرانی ژوب کے جنگلات میں لگی آگ پر تفصیلی بات چیت کی گئی

اور دونوں رہنماؤں نے آئندہ بات چیت رکھنے پر اتفاق کیاگیا میر جام کمال نے کہاکہ مولانا عبدالواسع بلوچستان کی ایک بہت بڑی سیاسی شخصیت ہے اور ان سے ملاقات معمول کے مطابق تھی بلوچستان کے روایات یہی ہے

کہ ہم ایک دوسرے کے ساتھ ملاقات کرکے اپنی مسائل کو حل کرنے میں کردار ادا کریں کیونکہ بلوچستان کے مسائل حل کرنا ہم سب کی ذمہ داری ہے جس کے لئے ایک اچھی حکومت کی ضرورت ہے اس وقت صوبے میں سیاسی صورتحال بحرانوں کا شکار ہے

اور حالات انتہائی ناگفتہ ہے جمعیت علماء اسلام کے صوبائی امیر مولانا عبدالواسع نے کہاکہ ہماری پشتون بلوچ روایات ہے کہ ہم ایک دوسرے کے ساتھ چل کر اپنے ہی مسائل کو حل کریں مستقبل میں بھی بات چیت کا سلسلہ جاری رہے گا

کیونکہ بلوچستان ہم سب کا ہے اور اس کے مسائل کو حل کرنا ہم سب کی مشترکہ ذمہ داری ہے۔